کورونا ویکسینز ممکنہ طور پر اومی کرون ویرینٹ کے خلاف موثر نہیں، موڈرنا

image

کورونا ویکسین بنانے والی کمپنی موڈرنا نے کورونا وائرس کے نئے ویرینٹ اومی کرون کے حوالے سے خطرے کی گھنٹی بجادی ہے۔

خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق موڈرنا کے سی ای او کا انٹرویو دیتے ہوئے کہنا تھا کہ کورونا وائرس کی دستیاب ویکسین جتنی ڈیلٹا ویرینٹ کے خلاف موثر تھیں اتنا اس نئی قسم کے لیے ہونے کا امکان نہیں ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ اس بارے میں بات کرنے سے پہلے اعداد و شمار کی طرف نظر ڈالنا ضروری ہے، تاہم تمام سائنسدان جن سے میں نے بات کی ان سب کا کہنا ہے کہ ’یہ اچھا نہیں ہوگا‘۔

موڈرنا کے سی ای او کے اس بیان نےساری دنیا میں ہلچل مچادی ہے جبکہ اس خوف نے بھی جنم لیا ہے کہ کورونا ویکسین کے غیر موثر ہونے سے بیماری کے پھیلاوں میں اضافہ ہوگا جس کی وجہ سے اسپتالوں میں مریضوں کی تعداد میں بھی اضافہ ہوسکتا ہے۔

واضح رہے کہ ماہرین اس نئے ویرینٹ کا مشاہدہ کرنے پر دنگ رہ گئے ہیں کیونکہ انہوں نے اس سے قبل کورونا کی اتنی خطرناک قسم نہیں دیکھی ہے۔

دوسری جانب امریکی صدر جو بائیڈن نے کورونا کی نئی قسم پر اظہار تشویش کرتے ہوئے کہا کہ اومیکرون وائرس پر تشویش ہے مگرعوام کو گھبرانا نہیں چاہیئے۔

جو بائیڈن کا کہنا تھا کہ امریکا میں آج نہیں تو کل اومیکرون کا کیس سامنے آئے گا، امریکی عوام ویکسین کےذریعے اپنے آپ کو محفوظ کریں، امریکیوں کو محفوظ رکھنے کیلئے تمام اقدامات کئے جائیں گے۔

امریکی صدر نے ڈاکٹر فاؤچی سمیت دیگر طبی مشیروں سے ملاقات کی  جس میں ڈاکٹر فاؤچی نے کہا کہ ویکسین اومیکرون سے کچھ نہ کچھ تحفظ فراہم کرتی ہے۔

یاد رہے کہ اس سے قبل امریکی صدر جوبائیڈن نے دعویٰ‌ کیا تھا کہ کورونا کی نئی قسم سے مقابلےکیلئے تیار ہیں اس پر بھی جلد قابو پالیں ‏گے۔

Square Adsence 300X250


News Source   News Source Text

WATCH LIVE NEWS

مزید خبریں
عالمی خبریں
مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.