نسوار کے شوقین افراد کیلئے بری خبر

image

نسوار کے شوقین افراد کے لیے ایک بُری خبر ہے، نسوار کے ساتھ سفر کرنا آپ کو جیل کی ہوا کھلا سکتا ہے۔

لیکن ذہنی سکون کے لیے یہ بھی جان لیں کہ نسوار کے ساتھ یہ سفری پابندی صرف عرب ممالک جانے والوں کے لیے ہے۔

یعنی نسوار کے ساتھ عرب ممالک کا سفر اب جرم قرار دے دیا گیا ہے۔

انسدادِ منشیات کے ادارے اینٹی نارکوٹکس فورس (اے این ایف) کے مطابق مشرق وسطیٰ میں نسوار کو منشیات کی فہرست میں شامل کر لیا گیا ہے۔

اے این ایف کے مطابق نسوارکے ساتھ عرب ممالک کا فضائی سفر اب جرم ہوگا۔

اگر کسی بھی مسافر سے لسٹ میں شامل ممالک میں نسوار برآمد ہوئی تو وہاں کے قانون کے مطابق سزا دی جائیگی۔

اے این ایف نے نسوار کے شوقین پاکستانی مسافروں کو عرب ممالک نسوار نہ لے جانے کی ہدایت کی ہے۔

اے این ایف کی جانب سے اس سلسلے میں ائیر پورٹس پر تنبیہی بینرز بھی آویزاں کر دئے گئے ہیں۔

نسوار کیا ہے اور کیسے تیار ہوتی ہے؟

نسوار تمباکو سے بنی گہرے سبز رنگ کی ہلکی نشہ آور چیز ہے۔

پاکستان خصوصاً خیبر پختونخوا اور قبائلی علاقوں میں نسوار کو منشیات میں ایک مقام حاصل ہے۔

نسوار کے عادی افراد زیادہ دیر اس سے دور نہیں رہ سکتے۔

نسوار کھانے والا ایک چٹکی کے برابر اپنے زیریں لب اور دانتوں کے درمیان دبا لیتا ہے اور تمباکو کے نشے کا سرور لیتا ہے۔

نسوار بنانے کے لیے تمباکو کے خشک پتوں میں حسب منشا چونا، راکھ اور ایک خاص گوند ملایا جاتا ہے۔

پھر اسے پتھر کی اوکھلی میں لکڑی کے موٹے موصل سے کوٹتے ہوئے پانی کے ہلکے چھینٹے مارے جاتے ہیں۔

Square Adsence 300X250


News Source   News Source Text

WATCH LIVE NEWS

مزید خبریں
پاکستان کی خبریں
مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.