بڑے ڈاکو نہیں پکڑنا تو جیلیں بھی کھول دیں،عمران خان

image

 چیئرمین تحریک انصاف عمران خان کا کہنا ہے کہ اپنی آنکھوں کے سامنے ايک آزاد پاکستان بنتے ديکھ رہا ہوں۔

فیصل آباد میں جلسے سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان کا کہنا تھا کہ قوم حقيقی آزادی کے لئے ميرے ساتھ نکل رہی ہے۔

چیئرمین تحریک انصاف کا کہنا تھا کہ 2018 میں فيصل آباد ميں پاورلومز بند پڑی تھيں، فيصل آباد کی ٹيکسٹائل انڈسٹری بند ہورہی تھی، ہماری حکومت ميں ٹيکسٹائل انڈسٹری نے تمام ريکارڈز توڑ ڈالے۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ کسی بھی ملک ميں سب سے بڑا مسئلہ بيروزگاری ہوتی ہے  مگر ہمارے دور حکومت میں ٹيکسٹائل انڈسٹری کے مالکان نے کہا ہميں مزدور نہيں ملتے، انہوں نے کہا کہ جب تک ايکسپورٹس نہ بڑھيں، ملکی دولت نہيں بڑھتی، فيصل آباد کی ترقی کا مطلب پاکستان کی ترقی ہے۔

سابق وزیراعظم کا کہنا تھا کہ ن لیگ  حکومت ميں وزارت تب تک نہيں مل سکتی جب تک بڑاجرم نہ کيا ہو، ايف آئی اے نے وزيراعظم اور وزيراعلیٰ پنجاب کی چوری پکڑی ہے یہ جہاں جائيں گے غدار اور چور کے الفاظ سنیں گے۔

انہوں نے کہا کہ چور، بھگوڑا لندن ميں بيٹھ کر پاکستان کے فيصلے کررہاہے، عوام نے ميرے ساتھ نکل کر ملک کو آزاد کرانا ہے۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ سب سے مشکل معاشی حالات ہماری حکومت کو ملے، کورونا سے بھارت ميں تباہی ہوئی، معيشت بيٹھ گئی، اللہ کے کرم سے کورونا جيسے بحران سے بھی نکل گئے، سازش کر کے ہماری حکومت گرائی گئی۔

چیئرمین تحریک انصاف کا کہنا تھا کہ ماضی ميں جب بھی حکومت گئی مٹھائياں بانٹی گئيں مگر ہماری حکومت گرنے پر لوگ سڑکوں پر نکل آئے ، لوگ سازش کے خلاف سڑکوں پر  نکل آئے۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ انہيں خوف ستانے لگا کہ عوام کا سمندر اسلام آباد آنے والا ہے اسلئے انہوں نے فيصلہ کيا عمران خان کو دنيا سے ہی فارغ کراديں، ميں نے ويڈيو بيان ريکارڈ کراديا ہے، ويڈيو ميں سب لوگوں کا نام ليا ہے۔

سابق وزیراعظم کا کہنا تھا کہ ہمارے ملک ميں کبھی طاقتور مجرم کو نہيں پکڑاجاتا، لياقت علی خان کے قاتلوں کو نہيں پکڑا گيا، فيصلہ کيا قوم کو پتا چلنا چاہئے سازش کے پيچھے کون تھا۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ صدر مملکت نے چيف جسٹس کو خط لکھا ہے جس میں مراسلے سے متعلق بتايا ہے، انہوں نے کہا کہ امريکی عہديدار نے پاکستاني سفير کو دھمکی دی کہ اگر عمران خان کو نہ نکالا تو پاکستان کو مشکل ہوگی۔

چیئرمین تحریک انصاف کا کہنا تھا کہ 22 کروڑ عوام کے منتخب وزيراعظم کو دھمکی دی گئی، امريکی کون ہوتے ہيں ہميں معاف کرنے والے؟ جو لوگ سپرپاور سے ڈرتے ہيں وہ شرک کرتے ہيں۔ خوف کا بت توڑنا بڑا انسان بننے کے لئے ضروری ہے۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ ہم اس حکومت کو تسليم نہيں کريں گے، ان لوگوں کو ہم پر مسلط کرنا 22کروڑ عوام کی توہين ہے۔


News Source   News Source Text

WATCH LIVE NEWS

مزید خبریں
تازہ ترین خبریں
مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.