منی لانڈرنگ کیس: وزیراعظم شہباز شریف خصوصی عدالت میں پیش

image

پاکستان کے وزیراعظم شہباز شریف اور پنجاب کے وزیراعلٰی حمزہ شہباز کے خلاف لاہور کی مقامی عدالت میں منی لانڈرنگ کیس کے دوران سلمان شہباز اور دیگر کو اشہتاری قرار دیتے ہوئے فیصلہ محفوظ کر لیا گیا ہے۔

سنیچر کو وزیراعظم اور وزیراعلٰی پنجاب لاہور کی سپیشل کورٹ سینٹرل میں پیش ہوئے۔

ایف آئی اے کے پراسکیوٹر نے عدالت میں تین اشتہاری ملزمان کے خلاف مزید کارروائی کی درخواست بھی دی ہے۔

خصوصی عدالت کے جج نے سوال ایف آئی کے وکیل سے سوال کیا کہ چار ماہ پراسیکیوشن کیوں خاموش رہی؟

اس پر سپیشل پراسکیوٹر ایف آئی اے کا کہنا تھا کہ ’میں اب آیا ہوں عدالت کی معاونت کروں گا۔‘

عدالت نے کہا کہ ’جن ملزمان کو اندر نہیں آنے دے رہے ان کی درخواست دیں۔‘

فاضل جج نے کہا کہ ’سکیورٹی والے اندر آنے نہیں دے رہے میں ان کو ڈسمس کروں گا۔‘

عدالت نے وزیراعظم شہباز شریف سے کہا کہ آپ دیکھ لیں کہ ملزمان کو بھی اندار نہیں آنے دے رہے۔ ’آپ انتظامیہ کے سربراہ ہیں آپ یہاں کھڑے ہو کر بھی حکم دے سکتے ہیں۔‘

وزیراعظم شہباز شریف نے ساتھ کھڑے وزیراعلٰی حمزہ شہباز کو فوری تحقیقات کا حکم دے دیا۔

وزیراعظم شہباز شریف کے وکیل امجد پرویز عدالت کو بتایا کہ 2008 سے 2018 کے دوران جرم کے الزامات لگائے گئے۔

ان کا کہنا تھا کہ بہت سارے الزامات کو پراسیکیوشن ٹیم نے چالان میں ختم کر دیا ہے۔

وکیل امجد پرویز کا کہنا تھا کہ شہباز شریف کے خلاف ساری تحقیقات کی سربراہی سابق مشیر احتساب نے کی۔


News Source   News Source Text

WATCH LIVE NEWS

مزید خبریں
پاکستان کی خبریں
مزید خبریں

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.